بنیادی صفحہ » ایکسکلوسوز » پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ میں غیر قانونی بھرتیاں، تحقیقات کا آغاز، ریکارڈ طلب،فوکل پرسن مقرر کرنے کا حکم

پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ میں غیر قانونی بھرتیاں، تحقیقات کا آغاز، ریکارڈ طلب،فوکل پرسن مقرر کرنے کا حکم

اسلام آباد(سید تبسم عباس شاہ)وزارت اطلاعات و نشریات کی طرف سے پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ میں خلاف قواعد و ضوابط ہونیوالی بھرتیوں کی تحقیقات کیلئے وزیر اعظم کی پریس سیکرٹری شاہیرہ شاہد کی سربراہی میں بنائی گئی کمیٹی نے باضابطہ طور پر کام شروع کر دیا ہے ،

اس حوالے سے پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ سے ھال ہی میں ہونیوالی بھرتیوں سے ریکارڈمانگ لیا گیا ہے،تحقیقاتی کمیٹی کی چیئرپرسن شاہیرہ شاہد کی طرف سے تحریری طور پر ایک خط کے ذریعے پرنسپل انفارمیشن آفیسر پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ کے نام خط میں کہا گیا کہ حال ہی میں بھرتی ہونے والے ملازمین کی لسٹ فوری طعر پر تیار کر کے انکوائری کمیٹی کو بھجوائی جائے اور اس کے ساتھ اس چیز کی بھی نشاندہی کی جائے کہ مذکورہ بھرتی ہونیوالے افراد کوکس افسر کے حکم پر بھرتی کیا گیا ہے

بھرتی کے قواعد و ضوابط بھی انکوائری کمیٹی کو بھجوائے جائیں اور اس انکوائری کا جلدی مکمل کرنے کی ڈیڈ لائن کو مدنظر رکھتے ہوئے پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ میں کسی افسر کو انکوائری کمیٹی کیلئے فوکل پرسن بنایا جائے جو انکوائری کمیٹی کو ضروری معلومات اور ریکارڈ فراہم کرے ۔یاد رہے کہ حال ہی میں جونیئر عہدوں پہ20کے لگ بھگ افراد کو خلاف قواعد و ضوابط بھرتی کیاگیا ،

پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ ، غیرقانونی بھرتیوں کے تازہ ترین بڑے سکینڈل کاانکشاف, ڈاکٹر فردوس عاشق نے سکینڈل پکڑ لیا

بھرتی کے حوالے سے تمام قوانین کو نظر انداز کیا گیا اس سے قبل بھی وزارت اطلاعات و نشریات کے دو سینئر افسران کی طرف سے اپنے ڈرائیوروں کے بھائیوں اور ایک افسر کی طرف سے اپنی بیگم کی فرمائش پر کچھ بھرتیاں کرنے کا انکشاف ہو ہے۔مذکورہ افسر کے متعلق یہ بھی انکشاف کیا گیا ہے کہ وہ اپنے ماتحت افسران کے معاملات میں بہت سخت ہے لیکن اپنی بیگم کی فرمائش پر خلاف ضابطہ کام کرنے کیلئے تیار ہو جاتے تھے

یہ بھرتیاں سابق وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری اور حالیہ معاون خصوصی وزارت اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان کے دور میں کی گئیں اور ان کے بارے میں کسی نے معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان کو اطلاع دیدی تھی جس پر انہوں نے اس معاملے کا نوٹس لیکر فوری انکوائری کا حکم دیا جس سے سیکرٹری اطلاعات و نشریات زاہدہ پروین نے وزیر اعظم کی پریس سیکرٹری شاہیرہ شاہد اور مینیجنگ ڈائریکٹر اے پی پی طارق محمود خان پر مشتمل دو رکنی کمیٹی قائم کر دی تھی جسے 10روز میں انکوائری رپورٹ مکمل کرنے کا حکم دیا تھا ۔اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ حال ہی میں ہونیوالی بھرتیوں کو پیپلز پارٹی اور ن لیگ کے دور سے ہونیوالی بھرتیوں کیساتھ گڈمڈ کر کے ”مٹی پائو”پروگرام کی تیاریاں کی جارہی ہیں

x

Check Also

شمالی وزیرستان: دہشت گردوں کا فوجی چیک پوسٹ پر حملہ

شمالی وزیرستان: دہشت گردوں کا فوجی چیک پوسٹ پر حملہ

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں نے پاک فوج کی غریوم چیک پوسٹ پر حملہ کیا۔