بنیادی صفحہ » ایکسکلوسوز » دس ارب روپے کاسادات ویلفیئر سپیشل فنڈ،معدنیات آمدن پر20فیصدسادات کا شرعی حق دلوانے کیلئے قانون بنایا جائے، حنیف قریشی

دس ارب روپے کاسادات ویلفیئر سپیشل فنڈ،معدنیات آمدن پر20فیصدسادات کا شرعی حق دلوانے کیلئے قانون بنایا جائے، حنیف قریشی

وزیراعظم،اراکین قومی، صوبائی اسمبلی اورسینٹ پرآپ ۖ کاقرض ہے، دوسری صورت قیامت کو رسول ۖخدا کو منہ دکھانے کے قابل نہیں ہونگے
صدقہ ،زکواة کی ممانعت کے باعث تمام مکاتب فکر کے باب رکاز میں آل رسول ۖ کی امداد کے لئے معدنیات آمدن کاپانچواں حصہ درج ہے
اسلام کے نام پربننے والے ملک میں خون رسول کو حق نہ ملنا افسوسناک، حکمرانوں کی جوابدہی ہوگی، قانون سازی تک غریب سادات کا سپیشل فنڈقائم کیا جائے
آزاد کشمیر حکومت کے نادارسادات کیلئے1 ارب روپے کے فنڈکاقیام پاکستانی حکومت کے لیے قابل تقلید،غیرسیدکاسیدبنناگناہ کبیرہ،غیرباپ کو منسوب کرنیوالاکفر کرتا ہے
آئی ایم آئی نیوز ایجنسی کو خصوصی انٹرویو
ٍٍِاسلام آبا د(آئی ایم آئی) نامور عالم دین مفتی حنیف قریشی نے کہا ہے کہ وزیراعظم پاکستان واقعی اگر صحیح معنوں میںملک کو ریاست مدینہ بنانا چاہتے ہیں تو سب سے پہلے تاجدار مدینہ کی آل اولاد(سادات) کو ملک سے نکلنے والی معدنیات کی آمدن میں سے ان کا بیس فیصد شرعی حق دلوانے کے لیے قانون سازی کریں اورجب تک قانون سازی نہیں ہوپاتی ،اسوقت تک غریب سادات کی امداد کے لیے کم از کم دس ارب روپے کا سپیشل فنڈقائم کریں۔ قومی اسمبلی ،سینٹ اور صوبائی اسمبلیا ں اس حوالے سے قانون سازی کر کے معدنیات سے حاصل ہونے والی آمدنی کے20 فیصد سے سادات کی فلاح وبہبود کے لیے سپیشل فنڈ قائم کریں جان بوجھ کر ایسا نہ کرنے پر اراکین قومی و صوبائی اسمبلی اور سینٹ قیامت کے روز رسول ۖخدا کو منہ دکھانے کے قابل نہیں ہونگے ۔آئی ایم آئی نیوز ایجنسی سے خصوصی انٹرویو کے دوران ان کا کہنا تھا کہ بریلوی ،دیوبندی ،اہلحدیث اور اہل تشیع فقہ کے باب (رکاز) میں واضح طور پر قران وحدیث نبویۖ کی روشنی میں درج ہے کہ زمین سے حاصل ہونے والے تمام خزانوں کا پانچواںحصہ آل رسولۖ یعنی سادات کا حق ہے ۔چونکہ نبی پاک ۖکی اولاد ہونے کی وجہ سی سادات پر صدقات ،خیرات اور زکواةحرام ہے اس لیے شریعت میں نادار سادات کی امداد کے لیے معدنیات کی آمدن سے پانچواں حصہ رکھا گیا ۔اب جبکہ ملک بھرمیں معدنیات نکالنے کا کام قومی اور صوبائی حکومتیں از خود یا مختلف لوگوں کو زمین ٹھیکے پر دیکر معدنیات نکلوا رہی ہیں۔اس لیے قانون سازی تمام صوبائی اسمبلی، قومی اسمبلی اور،سینیٹ کے ممبران کی شرعی، اخلاقی ذمہ داری ہے اور یہ ان پر نبی پاک ۖ کا قرض ہے، مفتی حنیف قریشی اس وقت بہت سے سادات مالی پریشانی کا شکار ہیں انکی امداد ہمارا شرعی فریضہ ہے۔نادارسادات کی امداد کے حوالے سے سابق وزیر اعظم آزاد کشمیر اوراراکین اسمبلی کی طرف سے ایک ارب روپے کے فنڈکاقیام بہترین مثال ہے،میں نے اس وقت کی آزاد کشمیر حکومت کو انکے شرعی فریضے کے حوالے سے آگاہ کیا تھا۔ پی ٹی آئی حکومت آزاد کشمیر حکومت کے اس ماڈل سے استفادہ کرسکتی ہے، وزیراعظم، چیئرمین سینٹ اور تمام وزرائے اعلی کیساتھ اپوزیشن جماعتیں اس حوالے سے اپنا کردار ادا کریں۔ انہوں نے کہا کہ اسلام کے نام بننے والے وطن عزیز کے قیام کے ستر سال بعدبھی نبی پاک صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی اولاد کو انکے شرعی حق سے محروم رکھنا انتہائی افسوسناک ہے، اس ضمن تمام ذمہ داروں کو جواب دینا پڑے گا۔ اس موضوع پر قومی اسمبلی، سینیٹ، صوبائی اسمبلی یا کسی فورم پر بلایا گیا تو میں تمام مسالک کی فقہ کی کتابوں سے قرآن وسنت کی روشنی میںمعدنیات کی آمدن پر بیس فیصد سادات کا حق ثابت کرنے کے لیے تیار ہوں ۔بعض لوگوں کے زیادہ عزت حاصل کرنے کے لیے سید بننے کے سوال کے جواب میں مفتی حنیف قریشی نے کہا کہ نبی ۖ کا فرمان ہے کہ جس نے اپنا نسب تبدیل کیا یا اپنی نسبت غیر باپ کیساتھ منسوب کی اس نے کفر کیا صحیح مسلم کے مطابق ایسے شحض پر جنت کی ہوا بھی حرام ہے ایسا شحص اپنی ماں پر تہمت لگاتا ہے وہ کسی کے باپ کو اپنا باپ قرار دیتاہے ۔ یہاں معاملہ صرف سادات کا نہیں بلکہ کوئی بھی اپنا نسبت یاقبیلہ تبدیل کرتا ہے وہ گناہ کبیرہ کرتا ہے سید بطور لقب نہیں بطور قوم یا بطور نسب کے بولا جاتا ہے سیدہ وہ کہلا سکتا ہے جس کا سلسہ نسب امام حسن اور امام حسین سے ملتا ہے۔ سادات سے محبت اور ان کا احترام سب پر واجب ہے مجھے آل رسولۖ سے محبت اپنے والدین ، اساتذہ اور اپنے مرشد سے ملی ہے۔اس محبت کو سب سے بڑااثاثہ ، اللہ تعالی کا کرم سمجھتا ہوں اور میری زندگی کی یہ آخری خواہش ہے کہ اگر موت بھی مجھے آئے تو سادات کی محبت پر آئے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

x

Check Also

شمالی وزیرستان: دہشت گردوں کا فوجی چیک پوسٹ پر حملہ

شمالی وزیرستان: دہشت گردوں کا فوجی چیک پوسٹ پر حملہ

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں نے پاک فوج کی غریوم چیک پوسٹ پر حملہ کیا۔